میرے سوہنے لوگ کراچی دے

میرے سوہنے لوگ کراچی دے

میرے سوہنے دیس کا تیکھا شہر کراچی،جس کا دامن ایک ماں کی طرح وسیع ہے، جس کے موسم ایک غریب کو اس کی غربت کا احساس دلاۓ بغیر گزر جاتا ہےنہ تو وہ سردی میں کمبل ڈھونڈتا ہے، اور نہ ہی گرمی میں اےسی کی پناہ۔ جہاں کے بھوکوں کو اس بات کا یقین ہوتا ہے کوئی نہ کوئی مہربان، کہیں نہ کہیں دسترخوان بچھاۓ اس کا انتظار کر رہا ہو گا درحقیقت کراچی ایک شہر کا نام نہیں ہے بلکہ ایک مزاج ایک فطرت کا نام بنتا جا رہا ہے جہاں اگر ایک جانب پوش علاقے کے رہائشی اعلی برانڈ کی دوڑ میں آگے نکل جانے کے لۓ بیتاب ہوتے ہیں تو دوسری جانب اسی پوش علاقے سے چند محلوں کے فاصلے پر کسی غریب کی بیٹی کی شادی کسی مہرباں کے توسط سے ہو رہی ہوتی ہے

01

Source: tribune.com.pk

لوگ کہتے ہیں کہ دنیا میں سب سے ذیادہ چندہ یا امداد دینے والا شہر کراچی ہے جبھی تو کچھ نبض شناس لوگوں نےاس امداد کو بھتہ سمجھ کر جمع کرنا شروع کر دیا ہے. میرا سوہنا شہر کواچی، جس کی سڑکیں ٹوٹی پھوٹی ، جس کی بسیں چھت تک مسافروں سے بھری ہوئیں اور جس کے مسافر اس بات پر مشکور نظر آتے ہیں کہ چلو چھت پر ہی بیٹھ کر گھنٹوں کی صعوبتوں کے بعد کم اذکم گھر تک تو پہنچیں گے

02

Source: Pakistan Defence

عبدالستار ایدھی بھی تو ایک کراچی والا تھا جس نے کراچی سے بے حد اور بے پناہ پیار کیا اور پھر جب کراچی والوں نے اپنا پیار ایدھی صاحب کی جھولی میں ڈالاتو ان کا دامن چھوٹا پڑ گیا۔ ایدھی صاحب کو جب ضرورت پڑی کشکول لے کر انہی کراچی والوں کی طرف نکل پڑےجنہوں نے انہیں کبھی مایوس نہیں کیا

Source: US News

لوگ کہتے ہیں کہ اب کراچی روشنیوں کا شہر نہیں رہا۔ میں کہتی ہوں کہ یہ تو اب بھی روشنیوں کا شہر ہے بس ہم نے اس کے پیار کی روشنیوں کو دیکھنا بند کر دیا ہےورنہ امجد صابری کا عظیم الشان جنازہ اس بات کا ثبوت تھا کہ کراچی والے پیار بھی جی بھر کر کرتے ہیں

04

Source: BBC

کراچی کا خمیر محبت سے جڑا ہے جہاں ہر قومیت کا بندہ عبداللہ شاہ غازی کے مزار پر حاضر ہو کر اس شہر کی سلامتی کی دعا کرتا ہے جہاں آج بھی ہر قومی اور مذہبی تہوار بغیر کسی مسلک اور فرقے کے تفرقے کے بجاۓ یکساں احترام اور ہم آہنگی کے ساتھ منایا جاتا ہےجہاں یوم آذادی کے دن سب سے ذیادہ پرچم خریدے جاتے ہیں جہاں عیدمیلادالنبی اور محرم میں اتنا کھانا بنایا اور بانٹا جاتا ہے کہ کوئی غریب بھوکا نہیں سوتا
اے میرے رب میرے شہر کو نظر لگ گئی ہے اس پر سے یہ بری نظر دور فرما
آمین

Parhlo

Parhlo.com is the leading open platform that represents the voice of youth with viral stories and believes in not just promoting Pakistani talent and entertainment but in liberating Pakistani youth and giving rise to young changemakers!

Posts
Parhlo Newsletter
Parhlo Newsletter

You have Successfully Subscribed!

To Top