چٹ پٹے سوال اور حمزہ علی عباسی کے نٹ کھٹ جواب

چٹ پٹے سوال اور حمزہ علی عباسی کے نٹ کھٹ جواب

Disclaimer*: The articles shared under 'Your Voice' section are sent to us by contributors and we neither confirm nor deny the authenticity of any facts stated below. Parhlo will not be liable for any false, inaccurate, inappropriate or incomplete information presented on the website. Read our disclaimer.

پاکستان کے ہردل عزیز اداکار، ماڈل، ٹیلی ویژن ہوسٹ اور سوشل میڈیا سنشین کے نام سے پہچانے جانے والے حمزہ علی عباسی کو کون نہیں جانتا۔ حمزہ نے اپنے بے باک تجزیئوں اور دل موہ لینے والی ادکاری کے بل بوتے پر مداحوں کے دل میں خصوصی جگہ بنا رکھی ہے۔

پیارے افضل کی ایک جھلک دیکھنے اور ان کی زندگی کے بارے میں جاننے کے لئے مداح ہمہ وقت بے چین رہتے ہیں۔ لیکن حال ہی میں حمزہ نے اپنی زندگی کی اہم رازوں سے پردہ اٹھتے ہوئے ان تمام سوالوں کے جواب دیئے ہیں جو پاکستانی جاننے کے لئے بے تاب ہیں۔

ایک انٹرویو میں شو ہوسٹ نے حمزہ کو اڑے ہاتھوں لیتے ہوئے جھٹ پٹ کچھ چٹ پٹے سوال کئے، جس پر حمزہ نے صاف جواب دے دیا کہ پھڈے باز سوال نہ کریں۔ لیکن اس کے باوجود وہ سوالات سے چنگل سے بچ کر نکلنے میں کامیاب نہ ہوسکے۔

حمزہ نے کچھ شرماتے کچھ مسکراتے ہوئے اپنی شادی کے مقابلے کرکٹ میچ دیکھنے کو ترجیح دی۔ جبکہ حمزہ کی نظر میں صبا قمر، ماہرہ خان اور عائشہ خان پاکستان کی صف اول کی اداکارہ ہیں، ویسے صبا قمر کو بہترین اداکارہ قرار دینا تو بنتا ہی ہے۔۔۔ باقی عوام خود سمجھدار ہیں۔

جب پوچھا گیا کہ حمزہ کو اگر صلاح الدین کی جگہ منو بننا پڑے یعنی اگر وہ ہیروئن ہوں تو کس ہیرو کے ساتھ کام کرنا پسند کرتے، جس کے جواب میں حمزہ نے شرارت بھرتے انداز میں اسماعیل تارہ کا نام لیا۔

کہتے ہیں نہ کہ امید پر دنیا قائم ہے، لہذا تمام لڑکیاں دل تھام لیں کیونکہ حمزہ نے آخرکار اس چیز کا نام بھی لے لیا جو انہیں صنف نازک کی جانب متوجہ کرتی ہے۔۔۔ اور وہ ہے ’آنکھیں‘۔۔۔

ارے لڑکیوں، حمزہ کو پٹانا ہے تو پہلے اس کی بہن کو منانا ہے کیونکہ بقول حمزہ کے ان کی کامیابی کے پیچھے ان کی بہن کا ہاتھ ہے۔ حمزہ کا یہ انٹرویو جلد آن ائیر کیا جائیگا

Parhlo

Parhlo.com is the leading open platform that represents the voice of youth with viral stories and believes in not just promoting Pakistani talent and entertainment but in liberating Pakistani youth and giving rise to young changemakers!

Posts
Parhlo Newsletter
Parhlo Newsletter

You have Successfully Subscribed!

To Top